صدائے مسلم
! اس بلاگ کے قیام کا مقصد دینی اور دنیاوی علوم کی نشر و اشاعت ہے ۔ ہمارا بنیادی حدف تعصب اور نفرت سے بالاتر ہو کر اعتدال پسندانہ مواد کا انتخاب ہے جس کو پڑھ کر قارئین نہ صرف علم میں اضافہ کریں بلکہ ایک متعدل اور مثبت سوچ سے بھی آراستہ ہوں ۔

ہرلفظ ہے ابہام، نہ چِیدہ نہ چُنیدہ

0 217

ہرلفظ ہے ابہام، نہ چِیدہ نہ چُنیدہ
کوئی نہیں پیغام، نہ چِیدہ نہ چُنیدہ

جو ماہ ترے غم میں گزرجائے مبارک
ہے صورتِ ایّام نہ چِیدہ نہ چُنیدہ

گاہے یہ نہ گہنائے تو مرجائے قسم سے
سُورج کی کوئی شام نہ چِیدہ نہ چُنیدہ

بس ایک تری راہ کو تکنے کے سوا اور
دنیا میں کوئی کام نہ چِیدہ نہ چُنیدہ

تُو آئے کہ میں جاؤں خداؤں کی بلاسے
ہے تیرامرانام نہ چِیدہ نہ چُنیدہ

ہم یار کے، اغیار کے، ہونٹوں پہ دھرے ہیں
تم پر کوئی الزام نہ چِیدہ نہ چُنیدہ

آغازِمحبت پہ تو دونوں کی رضا تھی
کیسے ہواانجام نہ چِیدہ نہ چُنیدہ

ہم یوں تو بہت خاص تھے پر عمر بسرکی
لوگوں کی طرح عام، نہ چِیدہ نہ چُنیدہ

آزاد بھی نیلام ہوا ہے سرِبازار
جس دم نہ کوئی دام نہ چِیدہ نہ چُنیدہ

بلاگ کی تحاریر بذریعہ ای میل حاصل کریں
بلاگ کی تحاریر بذریعہ ای میل حاصل کریں
اس سہولت کو حاصل کرنے سے آپ کو تمام تحاریر ای میل پتہ پر موصول ہونگی