صدائے مسلم
! اس بلاگ کے قیام کا مقصد دینی اور دنیاوی علوم کی نشر و اشاعت ہے ۔ ہمارا بنیادی حدف تعصب اور نفرت سے بالاتر ہو کر اعتدال پسندانہ مواد کا انتخاب ہے جس کو پڑھ کر قارئین نہ صرف علم میں اضافہ کریں بلکہ ایک متعدل اور مثبت سوچ سے بھی آراستہ ہوں ۔

تمہارے حسن کے جلوے بہم نہیں ہیں میاں !

0 174

تمہارے حسن کے جلوے بہم نہیں ہیں میاں !
نہیں ہیں، اب وہ تمہارے کرم نہیں ہیں میاں!

رہے عدم کے مقابل نہیں مجالِ وجود
ستم تو یہ ہے کہ "ہم ہیں، عدم نہیں ہیں‘‘ میاں !

یہ مانتے ہیں کہ قطرہ ہیں ایک پانی کا
مگر وجود کے دریا میں ضم نہیں ہیں میاں !

چلے بھی جائیں گے کاہے کی جلدیاں ہیں تمہیں
ابھی رُکو ابھی ہم تازہ دم نہیں ہیں میاں!

ہمیں نہ ڈھاؤ! کہ مشکل سےہم کھڑے ہوئے ہیں
ستم گزیدہ تو ہیں، خود ستم نہیں ہیں میاں!

ہزار بار اِسی زندگی سے گزرے ہیں
تمہارے خضر سے کم عمر ہم نہیں ہیں میاں!

یہاں کوئی کبھی واپس پلٹ نہیں سکتا
یہاں کسی کے بھی اُلٹے قدم نہیں ہیں میاں!

حریمِ دِل میں کوئی لاشریک ہے کہ نہیں
مگر یہ طے ہے وہ پہلے صنم نہیں ہیں میاں!

اب اِس جہاں میں ہمارا اگر نہیں ہے خدا
خدا کے ہم بھی خدا کی قسم نہیں ہے میاں!

’’یہ مال و دولت ِ دنیا یہ رشتہ و پیوند‘‘
یہ روزگار کے غم ہیں، یہ غم نہیں ہیں میاں!

بلاگ کی تحاریر بذریعہ ای میل حاصل کریں
بلاگ کی تحاریر بذریعہ ای میل حاصل کریں
اس سہولت کو حاصل کرنے سے آپ کو تمام تحاریر ای میل پتہ پر موصول ہونگی